تازہ ترین

News Detail

.....مردان کی عبدالولی خان یونیورسٹی میں

مردان کی عبدالولی خان یونیورسٹی میں شعبہ صحافت کے طالب علم مشال کو توہین رسالت کے الزام پر قتل کرنے میں ملوث ایک لیکچرار سمیت مزید3 ملزمان کو گرفتار کرلیا گیا جن کے ساتھ گرفتار ملزمان کی تعداد 56 تک پہنچ گئی ہے۔ پولیس ذرائع کے مطابق طالب علم مشال قتل کیس کی جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم (جے آئی ٹی) کی تفتیش کے نتیجے میں مزید تین ملزمان کو گرفتار کرلیا گیا ہے جن میں گورنمنٹ ڈگری کالج نمبر2 کے لیکچرار واجد عرف ملنگ اور دو طلباء ساجد ولد انور سکنہ لنڈے شاہ اور جلال ولد عزیر اللہ سکنہ بٹ سیری شامل ہیں۔ پولیس ذرائع کے مطابق تینوں ملزمان کا مشال قتل کیس میں اہم کردار ہے اور ان میں لیکچرر واجد عرف ملنگ نے واقعے سے کچھ دیر قبل یونیورسٹی میں اشتعال انگیز تقریر کرکے لوگوں کو اشتعال دلایا تھا، ملزمان ساجد اور جلال کو گزشتہ روز انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت میں پیش کیا گیا جہاں سے انہیں چار روزہ جسمانی ریمانڈ پر پولیس کی تحویل میں دیدیا گیا جبکہ ملزم واجد عرف ملنگ کو آج بدھ کے روز عدالت میں پیش کیا جائےگا۔ پولیس کے مطابق واجد عرف ملنگ واقعہ کے بعد سے روپوش ملزم تحصیل کونسلر عارف مردانوی کا قریبی ساتھی ہے مشال قتل کیس میں اب تک 58 ملزمان کی شناخت ہوچکی ہے جن میں 56 گرفتارہیں اور عارف مردانوی سمیت دو ملزمان روپوش ہیں ملزم عارف مردانوی کے علاوہ دوسرے ملزم کے وارنٹ گرفتاری پہلے ہی انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت سے جاری کیئے جا چکے ہیں تاہم اس کا نام فی الحال صیغہ راز میں رکھا جارہا ہے۔ مشال قتل کیس میں سپریم کورٹ کے از خود نوٹس کے حوالے سے سماعت آج بدھ کے روز ہوگی پولیس اس کیس کی عبوری چالان داخل کرچکی ہے تاہم حتمی چالان جمع کرانے میں ایک ہفتہ یا اس سے زائد وقت لگ سکتا۔

Comment Box is loading comments...

Make up Tip of the day

Using Small plates are Helping lose belly fat

Cooking Tip of the day

Aaloo Chaps (Potato Chaps)